New Qawwali :
Dear NFAK Lovers if you find any broken link or facing difficulty in downloading please Contact.
Home » , , » Lyrics Duniya e Butkada Na Fiza e Haram Pasand by Nusrat Fateh Ali Khan

Lyrics Duniya e Butkada Na Fiza e Haram Pasand by Nusrat Fateh Ali Khan

The Legend Ustad Nusrat Fateh Ali Khan Qawwal
Duniya e Butkada Na Fiza e Haram Pasand [Lyrics]
Posted by Nusrat Collection 
Lyrics Duniya e Butkada Na Fiza e Haram Pasand by Nusrat Fateh Ali Khan
[Video] [MP3] [Lyrics] [Download]
Na Haram Ki Justujo Hai Na Khiyal e Maikada Hai
Teri  Banda Parwari Ne Mujhe  Kia Bana Diya Hai


Mein  Yehi Karu Ga Sajde Yehi  Mera Mudaa Hai
Jo Mila Nahi Haram Se Tere Dar Se Woh Mila Hai


Tum  Samne Ho Ishq  Mera  Sarfraz Hai
Mere Liye Tumhari Parastish Namaz Hai
Teri  Ata e Khaas  Ne Pohncha Dia Kaha
Dono Jahan  Se  Tera  Gada Be Niaz Hai


Meri Taraf Bhi Koi Nigah Husan o Be Jamal
Teri  Nigaah  Sab  Ke  Liye  Dil  Nawaz Hai


Duniay e Butkada  Na  Fiza e Haram  Pasand
Mujh Ko Teri Gali Hai Khuda Ki Qasam Pasand


Jhuka Ke Sir Tere Astaane Mujhe Her Ik Mudaa Mila Hai
Teri  Gali  Kese  Chorr  Du  Teri  Gali Se Khuda Mila Hai


Kaabe  Mein Koi Sir Ko Jhukaye To Hame Kia
Hum Ne To Tera Darbar e Karam Dhoondh Lia


Paa Lia Mein Ne Maqsood e Hasti
Teri    Nisbat    Mujhe    Mil    Gai
Kia Gharaz Mujh Ko Daar o Haram Se
Meri    Nazro   Mein   Teri   Gali   Hai


Khusrawi   Achi  Lagi  Na   Sarwari  Achi  Lagi
Do Jahan Mein Mujh Ko Bas Teri Gali Achi Lagi


Mohtaj    Hu    Na    Mangta    Hu     Kisi     Ka
Mangta Hu To Mangta Hu Murshid Ki Gali Ka


Duniya  Teri Gali Mein  Uqba Teri Gali Mein
Kis Cheez Ki Kami Hai Moula Teri Gali Mein


Dahr o Haram Ki Azmatein Tasleem Hai Magar
Meri Jabeen Ko Hai Tera Naqsh e Qadam Pasand



Na  But Kade Se Na  Kaabe  Se Lo Lagi  Meri
Tumhare Naqsh e Qadam Se Hai Bandagi Meri



Jaha Jaha Bhi Mile Naqsh e Paaye Yaar Mujhe
Wahi    Namaz e Mohabbat   Ada   Hui   Meri



Mere Sanam Mere Sajdo Ki Abru Rakhna
Jabeen e Shoq   Tere   Dar   Pe   Jhuk Gai



Ae  Sheikh Tu Bata Tera Jata Hai Iss Mein  Kia
Ker Le Meri Khataein Jo Uss Ka Karam Pasand



Iss    Husan e Intikhab    Ke    Qurban    Jaiye
Pe Le Nigaah e Yaar Ko Aye Hai Hum Pasand



Tumhara Teer e Nazar Dil Ke Paar Ho Ke Raha
K Dil Ne Dam Bhi Na Mara Shikar Ho Ke Raha



Jo Baat Tujh Mein Hai Woh Kisi Or Mein Kaha
Tere   Siwa   Nahi   Koi   Teri   Qasam   Pasand



Pooja  Karu  Tumhari  Hai  Shoq Mere Jee  Ka
Dil Ke Muamle Mein Kiyo Dakhal Ho Kisi Ka



Jag Mein Aa Ker Idhar Udhar Daikha
Tu   He   Nazar   Aya   Jidhar  Daikha



Haseen Daikhe Jameel Daikhe Per
Aik Tumhi  Sa  Tumhi  Ko  Daikha



Iman Ka But Tor De Tasbeeh Musalla Chorr De
Daikhe   Koi   Zahid   Agar  Teri  Ada   Dilbar



Kafir Hua Hu Jab Se Mein Ankho Se Parde Hat Gaye
Her Cheez Mein Ai  Nazar  Ae  But  Teri  Jalwa Gari



Meri Nazar Ko Chahiye Deedar Tere Husan Ka
Daikho Agar Jalwa Tera Taskeen Ho Jaye Meri


Hai But Bohat Se But Kada e Kainaat Mein
Lekin Dil o Nazar Ne Kiya Ik Sanam Pasand


Zehar Daikha Hai Na Ghairo Ki Nazar Daikhi Hai
Meri   Nazro  Ne  Faqat  Teri   Nazar  Daikhi  Hai
Mein Ne Woh Kufar Kia Kufar Bhi Kufr e Adam
Teri   Soorat  Ke   Siwa  Agar   Koi   Daikhi   Hai


Meri To Kainaat Faqat Tere Dam Se Hai


Gham e Ashqi Se Pehle Mujhe Kon Janta Tha
Teri  Yaad  Ne Bana Di Meri  Zindagi  Fasana


Meri To Kainaat Faqat Tere Dam Se Hai


Deewar Ke Paar Kaha Meri Nazar Hai
Yeh Teri Inayat Hai Ke Rukh Idhar Hai


Meri To Kainaat Faqat Tere Dam Se Hai


Teri Ik Nigah Ki Qeemat Meri  Sari  Zindagani
Tu Agar Qabool Ker Le Hai Yeh Teri Mehrbani


Tera Dard Mera Darmaa Tera Gham Mera Tarana
Tere  Dam  Se  Baj  Raha  Hai  Mere Dil Ka Paani


Meri  To  Kainaat  Faqat  Tere  Dam  Se  Hai
Hai Kainaat Mein Mujhe Ik Tera Dam Pasand


Na Falak Na Chaand Tare Na Sehar Na Raat Hoti
Na Tera   Jamal   Hota   Na   Yeh   Kainaat   Hoti



Ya Rab Ho Kha Ke Koocha e Jana Mujhe Naseeb
Takht e Shaahi    Na   Jaah o Hasham    Pasand


Her Haal Mein Azeez Hai Sajid Raza e Dost
Arz o Sama Qabool Na Loh o Qalam Pasand



Duniay e Butkada  Na  Fiza e Haram  Pasand
Mujh Ko Teri Gali Hai Khuda Ki Qasam Pasand

نہ حرم کی جُستجو نہ خیالِ میکدہ ہے
تیری بندہ پروری نے مجھے کیا بنا دیا


میں یہی کروں گا سجدے یہی میرا مدعا ہے
جو ملا نہیں حرم سے وہ تیرے در سے ملا ہے


تم سامنے ہو عشق میرا سرفراز ہے
میرے لئے تمھاری پرستش نماز ہے
تیری عطاءِ خاص نے پہنچا دیا کہاں
دونوں جہاں سے تیرا گدا بے نیاز ہے


میری طرف بھی کوئی نگاہ حُسن و بےجمال
تیری نگاہ سب کے لئے دل نواز ہے


دنیائے بت کدہ نہ فضاءِحرم پسند
مجھ کو ہے تیری گلی خدا کی قسم پسند


جھکا کے سر تیرے آستانے مجھے ہر مدعا ملا
تیری گلی کیسے چھوڑ دوں تیری گلی سے خدا ملا


کعبے میں کوئی سر کو جھکائے تو ہمیں کیا
ہم نے تو تیرا دربارِ کرم ڈھونڈلیا


پالیا میں نے مقصودِ ہستی
تیری نسبت مجھے مل گئی
کیا غرض مجھ کو دار و حرم سے
میری نظروں میں تیری گلی ہے'


خسروی اچھی لگی نہ سروری اچھی لگی
دوجہاں مین مجھکو بس تیری گلی اچھی لگی


محتاج ہوں نہ منگتا ہوں کسی کا
منگتا ہوں تو منگتا ہوں مرشد کی گلی کا


دنیا تیری گلی میں عبقی تیری گلی میں
کس چیز کی کمی ہے مولا تیری گلی میں


دہر و حرم کی عظمتیں تسلیم ہیں مگر
میری جبیں کو ہے تیرا نقشِ قدم پسند
نہ بت کدے سے نہ کعبہ سے لو لگی میری
تمھارے نقشِ قدم سے ہے بندگی میری


جہاں جہاں بھی ملے نقشِ پائے یار مجھے
وہی نماز محبت ادا ہوئی میری


میرے صنم میرے سجدوں کی آبرو رکھنا
جبینِ شوق تیرے در پہ جھک گئی



اے شیخ تو بتا تیرا جاتا ہے اس میں کیا

کر لے میری خطائیں جو اُس کا کرم پسند

اِس حسنِ انتخاب کے قربان جائیے
پی لے نگاہِ یار کو آئے ہیں ہم پسند

تمھارا تیرِ نظر دل کے پار ہو کے رہا
کہ دل نے دم بھی نہ مارا شکار ہو کے رہا

جو بات تجھ میں ہے وہ کسی اور میں کہاں
تیرے سوا نہیں کوئی تیری قسم پسند

پوجا کروں تمھاری ہے شوق میرے جی کا
دل کے معاملے میں کیوں دخل ہو کسی کا

جگ مین آکر ادھر اُدھر دیکھا
تو ہی نظر آیا جدھر دیکھا

حسین دیکھے جمیل دیکھے مگر
اک تم سا تمھی کو دیکھا

ایمان کا بت توڑ دے تسبیح مصلے چھوڑ دے
دیکھے کوئی زاہد اگر تیری ادا دلبر

کافر ہوا ہوں جب سے میں آنکھوں سے پردے ہٹ گئے
ہر چیز میں آئی نظر اے بت تیری جلوہ گری

میری نظر کو چاہئے دیدار تیرے حسن کا
دیکھوں اگر جلوہ تیرا تسکیں ہو جائے میری

ہے بت بہت سے بت کدہِ کائنات میں
لیکن دل و نظر نے کیا اک صنم پسند

زہر دیکھا ہے نہ غیروں کی ںطر دیکھی ہے
میری نظروں نے فقط تیری نظر دیکھی ہے
میں نے وہ کفر کیا کفر بھی وہ کفرِ آدم
تیری صورت کے سوا اگر کوئی دیکھی ہے

میری تو کائنات فقط تیرے دم سے ہے

غمِ عاشقی سے پہلے مجھے کون جانتا تھا
تیری یاد نے بنا دی میری زندگی فسانہ

میری تو کائنات فقط تیرے دم سے ہے

دیوار کے پار کہاں میری نظر ہے
یہ تیری عنائت ہے کہ رُخ ادھر ہے

میری تو کائنات فقط تیرے دم سے ہے

تیری اک نگاہ کی قیمت میری ساری زندگانی
تو اگر قبول کر لے ہے یہ تیری مہربانی

میری تو کائنات فقط تیرے دم سے ہے
ہے کائنات میں اک تیرا دم پسند

نہ فلک نہ چاند نہ سحر نہ رات ہوتی
نہ تیرا جمال ہوتا نہ یہ کائنات ہوتی 

یارب ہو کھا کے کوچہِ جاناں مجھے نصیب
تختِ شاہی نہ جاہ و ہشم پسند

ہر حال میں عزیز ہے ساجد رضائے دوست
ارض و سماء قبول نہ لوح و قلم پسند

دنیائے بت کدہ نہ فضائے حرم پسند
مجھکو تیری گلی ہے خدا کی قسم پسند

Embed Code [Copy and Paste Code Where You Want]
<iframe frameborder="0" height="270" src="http://www.dailymotion.com/embed/video/x2gxb3v?autoplay=0&amp;logo=1&amp;info=0&amp;hideInfos=0&amp;start=0&amp;syndication=159793&amp;foreground=&amp;highlight=&amp;background=" width="480"></iframe>
<script type="text/javascript"><!--
google_ad_client = "ca-pub-7105599396460731";
/* Nusrat Banner */
google_ad_slot = "1942697416";
google_ad_width = 468;
google_ad_height = 60;
//-->
</script>
<script src="//pagead2.googlesyndication.com/pagead/show_ads.js" type="text/javascript">
</script>
Tags:
Lyrics Duniya e Butkada Na Fiza e Haram Pasand by Nusrat Fateh Ali Khan
Muhammad Ahsan
5 of 5
The Legend Ustad Nusrat Fateh Ali Khan Qawwal Duniya e Butkada Na Fiza e Haram Pasand [ Lyrics ] Posted by Nusrat Collection  ...
Share this Post :

0 comments:

Speak up your mind

Tell us what you're thinking... !

Search Your Video

Recent Post

Follow by Email

Google+ Followers

Recent Visitors

Nusrat Collection popular Posts

 
http://www.healpakistan.com/
Support : Creating Website | Johny Template | Mas Template
Proudly powered by Blogger
Copyright © 2011. Nusrat Collection - All Rights Reserved
Template Design by Creating Website Published by Mas Template